یا اللہ خیر :‌ماہ صیام میں‌پاکستان کا اہم ترین شہر خوفناک دھماکے سے لرز اٹھا ، ہر طرف لاشیں ہی لاشیں ، ایسی خبر آگئی کہ سن کر آپ کی روح کانپ جائے

لاہور : داتا دربار کے باہر سڑک پر ایلیٹ فورس کی گاڑی کے قریب مبینہ طور پر خودکش حملہ ہوا ہے، جس کے نتیجے میں سات افراد جاں بحق جبکہ 22 افراد زخمی ہوگئے۔

تفصیلات کے مطابق صوبہ پنجاب کے دارالحکومت لاہور کے علاقے داتا دربار کے گیٹ نمبر 2 پر تعینات ایلیٹ فورس کی گاڑی کے قریب خودکش حملہ ہوا جس کے بعد مذکورہ علاقے میں افراتفری مچ گئی۔

ذرائع کے مطابق خودکش حملے کے نتیجے میں دو بچوں اور تین پولیس اہلکاروں سمیت 5 افراد جاں بحق جبکہ 22 افراد زخمی ہوگئے ہیں جنہیں فوری طور پر میو ہسپتا منتقل کردیا گیا ہے۔۔

پولیس ذرائع کا کہنا تھا کہ ریسکیو ٹیموں نے بروقت امدادی کارروائی کرتے ہوئے زخمیوں کو قریبی اسپتال منتقل کردیا گیا ہے جہاں انہیں طبی امداد فراہم کی جارہی ہے۔

ذرائع کے مطابق حکام نے لاہور کے میو اور جنرل اسپتال میں ایمرجنسی نافذ کردی ہے، ڈاکٹرز کا کہنا ہے کہ دھماکے میں زخمی ہونے والے سات افراد کی حالت تشویش ناک ہے جنہیں سر میں شدید زخم آئیں ہیں۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ دھماکے کے نتیجے میں پولیس وین مکمل طور پر تباہ ہوچکی ہے جبکہ خودکش حملہ آور کی لاش جائے وقوعہ پر ہی موجود ہے۔

سیکیورٹی اداروں نے دھماکے کے بعد علاقے کی مکمل طور پر ناکہ بندی کردی تاکہ شواہد اکٹھے کیے جاسکے جبکہ پولیس کی جانب سے دھماکے کی نوعیت کا اندازہ لگایا جارہا ہے۔

واضح رہے کہ لاہور کا مذکورہ علاقہ انتہائی گنجان آباد علاقہ ہے جہاں کئی دکانیں اور قریب میں اردو بازار اور امام بارگاہ کربلا گامے شاہ بھی واقع ہے جہاں اس سے قبل چہلم امام حسین کے موقع پر خودکش دھماکا ہوا تھا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں