پاکستان نے حج آپریشن کا آغاز کردیا، لاہور ایئرپورٹ سے پہلی نجی فلائٹ مدینہ منورہ راونہ

لاہور (ڈیلی اردو) پاکستان سے پہلی حج پرواز روانہ ہوگئی۔ لاہور ائیرپورٹ سے 216 عازمین مدینہ منورہ روانہ ہوگئے۔

صوبائی وزیرمذہبی امور سید سعید الحسن بھی ائیرپورٹ پر موجود تھے جنہوں نے عازمین کو رخصت کیا۔ ڈائریکٹر حج ریحان عباس بھی ائیرپورٹ پر موجود رہے۔ 216 عازمین کو لےکر نجی ائیرلائن کی پرواز صبح 4:45 پر روانہ ہوئی۔

صوبائی وزیر مذہبی امور سید سعید الحسن نے عازمین سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ آپ لوگوں کو یہاں الوداع کہنے آنا میری خوش قسمتی ہے، حج پر جانے والے تمام عازمین کو مبارکباد دیتا ہوں۔ آپ لوگ پاکستان کے بہتر مستقبل کے لئے دعا کیجئے گا۔

انہوں نے مزید کہا کہ حکومت پاکستان نے تمام معاملات پورے کرلئے ہیں اور حجاج کے لئے بہترین انتظامات کئے ہیں۔

دوسری جانب سرکاری اسکیم کے تحت (کل) جمعہ  سے حج آپریشن کا آغاز ہوگا جبکہ 17اگست سے حاجیوں کی واپسی شروع ہوگی اور پوسٹ حج آپریشن 14ستمبر تک مکمل ہوگا۔ اس سال پی آئی اے کی 300 سو خصوصی پروازوں کے ذریعے 65 ہزار سے زائد عازمین حج کی سعادت حاصل کریں گے۔

حج آپریشن کے سلسلے میں اسلام آباد ائیرپورٹ پر روڈ ٹو مکہ منصوبے کا کامیاب تجربہ کیا گیا ہے جس کے تحت  اسلام آباد ائیرپورٹ کے 10خصوصی کانٹرز کو مدینہ اور جدہ ائیرپورٹ سے لنک کردیا گیا۔

ایسے میں 22 ہزار عازمین کی امیگریشن اور پری کلیئرنس اسلام آباد ائیرپورٹ سے ہی مکمل کرلی جائیگی۔حکومت نے حجاج کو مجموعی طور پر 5 ارب روپے کے قریب رقم واپس کرنیکا فیصلہ کیا ہے۔

وزارت مذہبی امور کے مطابق فی حاجی 30 سے 50 ہزار روپے تک واپس کیے جائیں گے۔رقوم واپسی کا فیصلہ حتمی منظوری کے لیے وفاقی کا بینہ کے اجلاس میں پیش کیا جائے گا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں