راولپنڈی میں 22 کم سن بچیوں کے اغوا اور زیادتی میں ملوث ملزم گرفتار

راولپنڈی (ڈیلی اردو) صوبہ پنجاب کے شہر راولپنڈی میں کم سن بچیوں کے اغوا اور زیادتی میں ملوث 55 سالہ ملزم کو گرفتار کرلیا گیا۔

پولیس کے مطابق ملزم کی عمر 55 سال ہے اور مختلف شہروں میں متعدد وارداتوں کا اعتراف کیا ہے، ملزم 12 سال قبل بھی بچیوں سے زیادتی کیس میں جیل جاچکا ہے۔ ملزم نے ابتدائی تفتیش میں 22 بچیوں سے زیادتی کا اعتراف کرلیا۔

پولیس کے مطابق ملزم نے ایک ماہ کے دوران 8 سے 12 سال کی بچیوں کو مبینہ زیادتی کا نشانہ بنایا۔ ملزم بچیوں کو اُن کے والد کا دوست بتاتا تھا اور اپنے ساتھ لے جاتا جبکہ ملزم زیادتی کا نشانہ بنانے کے بعد بچیوں کو ان کے گھر کے قریب چھوڑ جاتا تھا۔

ملزم نے پہلی بچی کو تھانہ وارث خان کی حدود سے اغوا کی اور زیادتی کا نشانہ بنایا جبکہ ملزم نے دوسری واردات تھانہ صادق آباد کی حدود میں کی اور وہاں بھی ایسا ہی کیا کہ بچی کو اغوا کیا، زیادتی کا نشانہ بنایا اور گھر کے قریب چھوڑ کر فرار ہو گیا۔

ملزم نے تیسری بچی کو تھانہ بنی کی حدود میں زیادتی کا نشانہ بنایا جبکہ چوتھی معصوم اور کم سن بچی کو ڈھوک کشمیریاں سے اغوا کیا اور زیادتی کا نشانہ بنایا۔

پولیس نے تفتیش کے کے دوران ملزم کے دیگر 3 ساتھیوں کو بھی گرفتار کر لیا۔

گزشتہ ماہ اسی طرح کی ایک کارروائی اسلام آباد کے تھانہ بارہ کہو کی حدود میں بھی ہوئی جس میں 4 سالہ معصوم بچی کو اغوا کے بعد زیادتی کا نشانہ بنایا گیا اور بے ہوشی کی حالت میں گھر کے قریب جھاڑیوں میں پھینک دیا گیا۔ جس کا مقدمہ تھانہ بارہ کہو میں درج ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں