233

جنوبی وزیرستان: دو قبائل میں تصادم، 5 افراد جاں بحق، 6 زخمی

وانا (دین محمد وزیر) خیبر پختونخوا کے قبائلی ضلع جنوبی وزیرستان کے ضلعی ہیڈکوارٹرز وانا میں دوتانی اور وزیر قبائل کے مابین تصادم، 5 افراد جاں بحق، متعدد افراد زخمی ہوگئے۔

تفصیلات کے مطابق 14 اگست کی شب دوتانی قبائل کے 300 کے قریب مسلح لشکر نے کرکنڑہ کے مقام پرزلی خیل قبائل کے رہائش پذیر درجنوں افراد پر دھاوا بول دیا تھا۔ جس کے نتیجے میں 5 افراد جاں بحق اور 6 سے زائد افراد زخمی ہوگئے ہیں۔

مقامی ذرائع نے بتایا کہ 14 اگست کی شب دوتانی قبائل کے 300 مسلح لشکر نے کرکنڑا کے مقام پر وزیر قبائل کے گھروں پر دھاوا بولا تھا اور دوتانی قبائل نے کرکنڑا اور اس کے مضافاتی پہاڑی چوٹیوں پر قبضہ کرلیا ہے۔

جواب میں وزیر قبائل نے بھی ہنگامی طور پر 1400 افراد پر مشتمل لشکر کرکنڑا روانہ کردیا اور وزیر قبائل کے مسلح افراد نے دوتانی قبائل کا محاصرہ کر رکھا ہے۔

ذرائع کے مطابق دونوں اطراف سے چھوٹے اور بڑے ہتھیاروں کا آزادانہ استعمال جاری ہے جس سے بڑے پیمانے پر انسانی جانوں کے ضیاع کے خدشہ ہے۔

انتظامیہ کی بھرپور کوششوں کے باوجود تاحال دونوں قبائل کے مابین مسلح جھڑپیں جاری ہیں، واضح رہے کہ دونوں قبائل کے مابین کرکنڑہ کی ملکیت پر عرصہ سے تنازع چلا آرہا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں