ابوبکر البغدادی نے صدام حسین کے سابق فوجی افسر عبداللہ قرداش کو اپنا جانشین مقرر کردیا

لندن (ڈیلی اردو) عالمی دہشت گرد تنظیم داعش کے سربراہ ابوبکر البغدادی نے عراق کے سابق آمر صدر صدام حسین کے فوجی افسر کو اپنا جانشین مقرر کر دیا۔

برطانوی اخبار نے دعوی کیا ہے کہ داعش کے سربراہ ابوبکر البغدادی نے اپنا جانشین عراق کے سابق مصلوب صدر صدام حسین کے ایک سابق فوجی افسر کو مقرر کیا ہے یعنی آئندہ داعش کی قیادت صدام حسین کا ایک سابق فوجی افسر کرے گا۔

برطانوی اخبار ’دی ٹائمز‘کے مطابق استاد کے لقب سے مشہور عبداللہ قرداش 2003 میں صدام کی فوج میں شامل تھا۔ امریکی فوج نے 48 سالہ البغدادی اور قرداش کو سنہ 2003ء کو پکڑا تھا۔ ان دونوں پر ‘القاعدہ’ کے ساتھ رابطوں کا الزام عاید کیا گیا تھا۔ دونوں کو بصرہ سے گرفتار کیا گیا۔

البغدادی نے قرداش کی مدد سے سینکڑوں قیدیوں کو ‘داعش’ میں بھرتی کرنے کی مہم چلائی اور اس کے ساتھ مل کر’خلافت’ کا اعلان کیا۔ اس وقت سے قرداش البغدادی کا انتہائی قریب رہا ہے۔عراق کے سابق سیکیورٹی ایڈوائزر فاضل ابو رغیف نے کہا کہ ابو بکر البغدادی اپنے منصب سے دست بردار نہیں ہوں گے۔

عبداللہ قرداش کو تنظیم کی لاجسٹک شعبے کے محدود اختیارات دیے گئے ہیں۔خیال رہے کہ عبداللہ قرداش کو ‘داعش’ کے قانون سازوں میں شمار کیاجاتا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں