ن لیگ کا ڈی جی ایف آئی واجد ضیاء کیخلاف ڈکیتی کا مقدمہ درج کرانے کا فیصلہ

لاہور (ڈیلی اردو/این این آئی) مسلم لیگ (ن) کی مرکزی سیکرٹری اطلاعات مریم اورنگزیب نے کہا کہ ہے کہ پارٹی کے مرکزی سیکرٹریٹ پر ایف آئی اے کے چھاپے پر آج بروز (جمعہ) کو بھرپور احتجاجی ریلی اور قانون کی دھجیاں اڑا کر چھاپے پر واجد ضیاء کے خلاف ڈکیتی کا مقدمہ درج کرانے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

مسلم لیگ (ن) کی ترجمان مریم اورنگزیب نے کہا ہے کہ پارٹی سیکریٹریٹ پر ایف آئی اے کے چھاپے سے بشیر احمد میمن کی کہانی سچ ثابت ہوگئی ہے۔

سابق ڈی جی ایف آئی اے نے عمران صاحب کے دبائو میں نہ آئے اور نالائق اور نااہل عمران صاحب کا آلہ کار بننے سے انکار کر دیا تھا۔

نوازشریف کے خلاف بدنام زمانہ ہیروں کو ہی پھر سے استعمال کرنے کا فیصلہ کیا گیا۔چھاپے سے ثابت ہوگیا کہ جج ارشد ملک کی وڈیو اصلی ہے، چھاپے سے یہ بھی ثابت ہوگیا کہ جج ارشد ملک نے دبائو کے تحت نوازشریف کو سزا سنائی تھی۔

مسلم لیگ (ن) کے مرکزی سیکریٹریٹ پر چھاپہ نالائق اور ناہل عمران صاحب کے کہنے پر مارا گیا، کرپشن کے جھوٹے مقدمات کے ثبوت نہیں مل رہے تو ایف آئی اے کو اب دبائو کے لئے استعمال کیا جا رہا ہے۔

حکومت عدلیہ کے فیصلوں پر اپنا غصہ مسلم لیگ (ن) سیکریٹریٹ پر بلاجواز چھاپے ماکر نکال رہی ہے،پارٹی مرکزی سیکریٹریٹ پر حملہ عمران نیازی حکومت کی شدید بوکھلاہٹ اور حواس باختگی کا ثبوت ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں