قاسم سلیمانی پر امریکی حملہ عراقی خود مختاری پر حملہ ہے، وزیراعظم عادل عبدالمہدی

بغداد (ڈیلی اردو) عراق کے وزیراعظم عادل عبدالمہدی نے ایرانی جنرل قاسم سلیمانی پر امریکی حملے کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ جنرل قاسم پر بغداد میں امریکی حملہ عراقی خود مختاری پر حملہ ہے

ایرانی خبر رساں ایجنسی تسنیم کے مطابق، عراقی وزیراعظم عادل عبدالمہدی نے جنرل قاسم سلیمانی کی شہادت پر رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے اس سے عراق پر جارحیت قرار دیا ہے۔

عراقی وزیراعظم نے کہا ہے کہ جنرل قاسم سلیمانی پر بغداد میں امریکی حملہ عراقی خود مختاری پر حملہ ہے۔

انہوں نے کہا کہ جنرل قاسم کا قتل قابل مذمت ہے اور یہ حملہ عراق، خطے اور دنیا کو ایک اور جنگ کی طرف لے جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ جنرل قاسم پر حملہ عراق میں امریکی افواج کی موجودگی کے معاہدے کی خلاف ورزی ہے۔

عراقی وزیراعظم نے جنرل قاسم سلیمانی کے قتل کے بعد پیدا ہونے والی کشیدہ صورتحال کو مدنظر رکھتے ہوئے پارلیمنٹ کا غیر معمولی اجلاس بھی طلب کر لیا ہے۔

یاد رہے کہ امام خامنہ ای نے قاسم سلیمان کے شہادت پر تین روزہ سوگ کا اعلان کر دیا ہے اور کہا ہے کہ اس کا بدلہ لیا جائے گا۔

بیان کے مطابق اس صورتحال پر غور کے لیے عراقی پارلیمان کا ہنگامی اجلاس طلب کر لیا گیا ہے تاکہ ملک کی سالمیت، سلامتی اور خودمختاری کے تحفظ کے لیے مناسب اقدامات اور قانون سازی کی جا سکے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں