غزہ: قاسم سلیمانی نے دو عشروں تک فلسطینی مزاحمت کی سرپرستی کی، ترجمان سرایا القدس

غزہ (ڈیلی اردو) اسلامی جہاد کے عسکری ونگ سرایا القدس نے امریکی حملے میں ایرانی جنرل قاسم سلیمانی اور ان کی ساتھیوں کی بغداد میں شہادت پر گہرے دکھ اور افسوس کا اظہار کیا ہے۔

مرکز اطلاعات فلسطین کے مطابق سرایا القدس کے ترجمان ابو حمزہ نے جمعہ کے روز ایک بیان میں کہا ہے کہ فلسطینی قوم بالخصوص فلسطینی مزاحمتی قوتیں شہید جنرل قاسم سلیمانی کی خدمات کو کبھی فراموش نہیں کرسکتیں۔ یہ جنرل سلیمانی تھے جنہوں نے مسلسل دو عشرے تک فلسطینی مزاحمت کی سرپرستی کی۔ ایران کی براہ راست مدد کی اور فلسطینی مجاھدین کو عسکری اور فوجی مہارتیں بہم پہنچائیں۔

ابو حمزہ کا کہنا تھا کہ ہمارے مجاھد رہ نما کو ہم سے چھین لیا گیا۔ وہ امریکیوں اور صہیونیوں کے دلوں پر رعب طاری کرنے والے تھے اور ان کی وجہ سے بزدل صہیونی اور امریکی سخت خائف تھے۔

انہوں نے مزید کہا کہ امریکی حملے میں جنرل سلیمانی کی شہادت سے فلسطینی مزاحمت کو شکست نہیں دی جاسکتی۔ ہم صہیونی۔ امریکی گٹھ جوڑ کے خلاف مسلح مزاحمت جاری رکھیں گے۔

خیال رہے کہ امریکا نے ایرانی جنرل قاسم سلیمانی کو آج جمعہ کو علی الصباح عراق میں بغداد کے بین الاقوامی ہوائی اڈے پر فضائی حملے کر کے کئی دوسرے کمانڈروں سمیت شہید کردیا تھا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں