255

پشاور میں سِکھ نیوز کاسٹر کا بھائی نامعلوم افراد کے ہاتھوں بے دردی سے قتل

پشاور (ڈیلی اردو) خیبر پختونخوا کے صوبائی دارالحکومت پشاور میں نامعلوم افراد نے پاکستان کے پہلے سکھ نیوز کاسٹر ہرمیت سنگھ کے بھائی کو فائرنگ کرکے قتل کردیا۔ مقتول رویندر سنگھ کی اگلے چند روز میں شادی ہونے والی تھی جو شاپنگ کے سلسلہ میں ضلع شانگلہ سے پشاور آیا تھا، نامعلوم ملزمان نے مقتول کے بھائی کو فون کرکے اطلاع بھی دی کہ آپ کے بھائی کو قتل کرکے نعش چمکنی میں پھینک دی ہے۔

پولیس کے مطابق تویندر سنگھ ولد اتم رام سنگھ سکنہ چکسیر شانگلہ نے تھانہ چمکنی پولیس کو رپورٹ درج کراتے ہوئے بتایا کہ کل رات اُس کو رویندر سنگھ کے موبائل فون سے کال موصول ہوئی، دوسری جانب ایک نامعلوم شخص نے بتایا کہ آپ کے بھائی رویندر کو قتل کرکے اُس کی نعش تھانہ چمکنی کی حدود میں پھینک دی ہے۔

پولیس کے مطابق پشاور کے تھانہ چمکنی کی حدود سے ایک شخص کی گولیوں سے چھلنی لاش برآمد ہوئی ہے۔ جس کی شناخت رویندرا سنگھ کے نام سے ہوئی ہے۔ لاش کو پوسٹ مارٹم کے لیے قریبی ہسپتال منتقل کردیا گیا ہے۔

پولیس کا کہنا ہے کہ مقتول رویندر سنگھ ملیشیاء میں کاروبار کرتا تھا جو حال ہی میں وطن واپس آیا تھا جس کی اگلے ہفتے شادی ہونے والی تھی اور وہ شاپنگ کے سلسلہ میں پشاور آیا تھا جبکہ مقتول کی پشاور آمد کا بھی صرف مخصوص افراد کو علم تھا۔

پولیس نے پوسٹ مارٹم کے بعد نعش ورثاء کے حوالے کردی اور جائے وقوعہ سے شواہد اکٹھے کرکے نامعلوم ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کرلیا۔

دوسری جانب ایس ایس پی آپریشنز ظہور بابر آفریدی نے خیبر میڈیکل کالج میں نعش کی پوسٹ مارٹم کے دوران مقتول کے ورثاء کو یقین دہانی کرائی کہ مختلف زاویوں سے تفتیش کا آغاز کردیا گیا ہے اور بہت جلد ملوث ملزمان کو ٹریس کرلیا جائے گا۔

ابھی تک کسی نے سکھ نوجوان قتل کرنے کی ذمہ داری قبول نہیں کی جبکہ اہل خانہ کی جانب سے بھی فوری طور پر کسی پر شک ظاہر نہیں کیا گیا۔

سکھ برادری سے تعلق رکھنے والے افراد مقتول رویندر سنگھ کی لاش پوسٹ مارٹم کے بعد پشاور پریس کلب لائے اور ایک مختصر مظاہرہ کیا۔ جس کے بعد میں انہوں نے لاش کو مقتول کے آبائی ضلعے شانگلہ روانہ کر دیا۔

دوسری جانب بھارت کی وزارت خارجہ نے پشاور میں سکھ نوجوان کے قتل کی شدید مذمت کی ہے۔

وزارت خارجہ کے بیان کے مطابق بھارت پاکستان کے شہر پشاور میں سکھ اقلیت سے تعلق رکھنے والے نوجوان کے قتل کی شدید مذمت کرتا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں