کراچی میں پولیس کی کارروائی، بلوچ لبریشن آرمی کا دہشت گرد گرفتار، ہینڈ گرنیڈ برآمد

کراچی (ڈیلی اردو) صوبہ سندھ کے صوبائی حکومت کراچی کے علاقے منگھوپیر کے علاقے میں پولیس کی کارروائی کرتے ہوئے کالعدم تنظیم بی ایل اے کے مبینہ دہشت گرد کو گرفتار کر کے اس کے قبضے سے ہینڈ گرنیڈ برآمد کر لیا۔

عیدالفطر کے دوسرے روز منگھوپیر کے علاقے مشکے پاڑا میں پولیس نےکارروائی کرتے ہوئے کالعدم تنظیم بلوچ لبریشن آرمی( بی ایل اے) کے مبینہ دہشت گرد عبدالرزاق ولد عبدالمالک کو گرفتار کرکے اس کے قبضے سے ہینڈ گرنیڈ برآمد کر لیا گیا۔

ایس ایس پی ویسٹ سہائی عزیز کے مطابق گرفتار ملزم 2010 میں بی ایل اے میں شمولیت اختیار کرنے کے بعد کمانڈر عبدالمالک کی زیر قیادت 2015 تک ملک دشمن سرگرمیوں میں سرفہرست رہا ہے۔ گرفتار ملزم کے قبضے سےبرآمد کیا جانے والا ہینڈ گرنیڈ ممکنہ طور پر قیمتی جانوں کے زیاں اور ناپاک عزائم کے لیے استعمال کیا جانا تھا۔

انھوں نے بتایا کہ گرفتار ملزم کے قبضے سے برآمد کیے جانے والے ہینڈ گرنیڈ کو بم ڈسپوزل یونٹ نے ناکارہ بنادیا ہے۔ گرفتار ملزم سے مزید تفتیش شروع کردی گئی ہے جس میں مزید انکشافات متوقع ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں