لاہور دھماکے میں ملک دشمن ایجنسیاں ملوث ہیں، وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار

لاہور (ڈیلی اردو) وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار نے کہا ہے کہ لاہور دھماکے میں ملک دشمن ایجنسیاں ملوث ہیں، دہشت گرد تنظیموں نے مقامی نیٹ ورک کے ساتھ مل کر منصوبہ بنایا، حملے میں ملوث تمام دہشت گردوں اور سہولت کاروں کو چار دن میں پکڑلیا جس کا سہرا سی ٹی ڈی کے سر ہے۔

وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار اور دیگر نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ تئیس جون کو صبح گیارہ بجے جوہر ٹاؤن میں بم دھماکا ہوا جس میں پولیس اہلکار سمیت تین افراد جاں بحق ہوئے جبکہ سی ٹی ڈی نے سولہ گھنٹے میں ذمہ داروں کا تعین کیا اور دہشتگردوں کو چار روز میں گرفتار کرلیا گیا ہے۔

وزیراعلیٰ پنجاب نے بتایا کہ ملزمان کو انتہائی پیشہ ورانہ انداز سے گرفتار کیا گیا، دہشتگردوں کیخلاف تمام شواہد اکٹھے کرلیے گئے اور صوبے میں تمام ہائی پروفائل کیسز کو ٹریس کرلیا ہے۔ عثمان بزدار کا کہنا تھا کہ دھماکے میں ملک دشمن ایجنسی ملوث تھی،مالی معاونت فراہم کرنے والے کرداروں کو بھی بے نقاب کیا۔ لاہور جوہر ٹاؤن دھماکے میں ملک دشمن ایجنسی ملوث ہے، تھریٹ جاری ہوتے رہتے ہیں لیکن اس واقعہ سے متعلق نہیں تھا۔

آئی جی پنجاب انعام غنی نے بتایا کہ گاڑی کی پہچان کر کے تفتیش کا دائرہ کار بڑھایا،گاڑی کی خریداری اور مرمتی کام میں ملوث افراد حراست میں ہیں جبکہ واقعہ میں ملوث تمام افراد سامنے آچکے ہیں، سی ٹی ڈی اور پولیس نے محنت سے پورا نیٹ ورک گرفتار کرلیا، زیر حراست ایک ملزم فورتھ شیڈول میں شامل تھا نہ ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں