امریکی فوج کی مختصر تعداد افغانستان میں رہیگی، پینٹاگون

واشنگٹن (ڈیلی اردو) پینٹاگون کا کہنا ہےکہ افغانستان سے انخلا کے بعد امریکی فوج کی مختصر تعداد وہاں رہے گی۔

واشنگٹن میں پریس بریفنگ کے دوران پینٹاگون کے ترجمان جان کربی نے کہا کہ صدر جوبائیڈن کی ہدایات کے مطابق افغانستان سے محفوظ انخلا جاری ہے اور وہاں سے امریکی افواج کا انخلا اگست کے آخر تک مکمل ہوجائے گا جب کہ افغانستان سے امریکی افواج کے انخلا کے بعد امریکی فوج کی مختصر تعداد وہاں موجود ہوگی۔

ترجمان پینٹاگون نے بتایا کہ افغانستان میں امریکی مشن کی کمانڈ جنرل فرینک میکنزی کو منتقل کرنے کی منظوری دے دی گئی ہے اور وہاں امریکی مشن کی کمانڈ کی منتقلی رواں ماہ کے آخر تک نافذ ہونے کی توقع ہے، جنرل میکنزی افغانستان میں امریکی افواج کے کمانڈرکی تمام ذمہ داریاں نبھائیں گے جب کہ جنرل ملر ذمہ داریاں جنرل میکنزی کو منتقل کرنے کیلئے کچھ ہفتے افغانستان میں رہیں گے۔

ترجمان کا کہنا تھا کہ افغانستان میں امریکی قیادت میں تبدیلی، بگرام ائیربیس کا کنٹرول واپس دینا انخلا میں اہم سنگ میل ہے، افغانستان میں امریکی فوج سفارتی عملے کے تحفظ اور کابل ائیرپورٹ کی سکیورٹی پرتوجہ رکھےگی، اس کے علاوہ امریکی فوج افغان فورسز کی معاونت و مشاورت، انسداد دہشتگردی کی امریکی کوششوں میں سپورٹ کرے گی۔

جان کربی نے مزید کہا کہ افغان حکومت اور عوام کے ساتھ تعاون جاری رکھیں گے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں