کراچی سے کالعدم تنظیم لشکر جھنگوی کا دہشت گرد احمد علی گرفتار

کراچی (ڈیلی اردو) صوبہ سندھ کے صوبائی حکومت کراچی میں کاؤنٹر ٹیررازم ڈیپارٹمنٹ اور رینجرز نے مشترکہ کارروائی کرتے ہوئے سی ٹی ڈی ریڈ بک میں شامل کالعدم تنظیم لشکر جھنگوی کا دہشتگرد گرفتار کرلیا۔

سی ٹی ڈی حکام کا بتانا ہے کہ گرفتار دہشتگرد احمد علی عرف ٹی ٹی کے قبضے سے اسلحہ اور دستی بم برآمد کیے گئے ہیں جب کہ ملزم جیل میں موجود کالعدم تنظیم کے قیدی دہشتگرد قاسم رشید کا قریبی ساتھی ہے۔

کاؤنٹر ٹیررازم ڈیپارٹمنٹ (سی ٹی ڈی) کے مطابق گرفتار دہشت گرد نے 2011 میں نمائش چورنگی پر فائرنگ کر کے 4 افراد کو قتل کیا، 2011 میں ایم کیو ایم یونٹ 174 کے کارکن موسیٰ کو قتل کیا تھا، ملزم 2011 میں شاہراہ نور جہاں کی حدود میں شراب خانے پر فائرنگ میں بھی ملوث ہے، 2010 میں ملزم نے ساتھی کے ہمراہ راولپنڈی میں تاجر سے 10 لاکھ روپے بھتہ وصول کیا تھا۔

سی ٹی ڈی کا بتانا ہےکہ ملزم جیل سے رہائی پانے والے دہشتگردوں کے ساتھ مل کر اہم مذہبی شخصیات کی ٹارگٹ کلنگ کی منصوبہ بندی کررہا تھا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں