کراچی سے کالعدم تحریک طالبان پاکستان کے دو دہشت گرد گرفتار

کراچی (ڈیلی اردو) سندھ پولیس کی بڑی کارروائی میں کالعدم تنظیم تحریک طالبان پاکستان سجناں گروپ کے 2 دہشت گرد گرفتار کرلئے گئے۔

پولیس حکام کے مطابق کراچی کے علاقے اسٹیل ٹاؤن میں مصدقہ اطلاعات پر کارروائی کرتے ہوئے تحریک طالبان پاکستان (سجناں گروپ) کے 2 دہشت گردوں کو گرفتارکرلیا گیا ہے، جن کے قبضے سے شارٹ مشین گن، دستی بم، ایمونیشن اور دیگر سامان برآمد ہوا ہے۔

حکام نے بتایا کہ گرفتار ملزمان میں سیف اللہ عرف محسن عرف صدام حسین اور حضرت بلال عرف بلال افغانستان سے تربیت یافتہ ہیں، دونوں نے 2013 میں ٹی ٹی پی سجناں گروپ میں شمولیت اختیار کی، دونوں کراچی میں بھتہ خوری سمیت ڈکیتیوں کی درجوں واداتوں میں ملوث تھے، اور منگھو پیر سے ٹی ٹی پی کے نام پر بھتہ لے کر سجناں گروپ کے کمانڈر فخرالدین عرف ملنگ کے حوالے کرتے تھے، اور منگھوپیر میں نوجوانوں کو ٹی ٹی پی میں شامل ہونے کیلئے ذہن سازی کرتے تھے۔

حکام کے مطابق 2013 میں نادرن بائی پاس پر نیٹو کا سامان لے کر جانے والا کنٹینر خراب ہوگیا، جسے سیکیورٹی خدشات کی بناء پر تھانہ منگھو پیر میں لے جایا گیا، لیکن ملزم سیف اللہ نے ساتھیوں کے ساتھ مل کر کنٹینر کو آگ لگادی اور فرار ہو کر شوال کے علاقے منتقل ہوگیا، ملزم نے ساتھیوں کے ساتھ مل کر پاکستان آرمی کے جوانوں پر مختلف اوقات میں حملہ کرنے کا بھی انکشاف کیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں