ٹی 20 ورلڈ کپ: پاکستان کے ہاتھوں نیوزی لینڈ کو پانچ وکٹوں سے شکست

شارجہ (ڈیلی اردو/بی بی سی/وی او اے ) پاکستان نے ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ میں اپنے دوسرے میچ میں دلچسپ مقابلے کے بعد نیوزی لینڈ کو پانچ وکٹوں سے شکست دے کر گروپ ٹو میں پہلی پوزیشن حاصل کر لی ہے۔

پاکستان کی فتح میں مرکزی کردار حارث رؤف کی شاندار بولنگ اور مشکل وقت میں آصف علی کی جارحانہ بیٹنگ کا رہا۔

حارث رؤف نے اپنے کرئیر کی بہترین بولنگ کرتے ہوئے 22 رنز کے عوض چار وکٹیں حاصل کیں جبکہ آصف علی نے محض 12 گیندوں پر تین چھکوں اور ایک چوکے کی مدد سے قیمتی 27 رنز بنا کر پاکستان کو جیت سے ہمکنار کروایا۔

منگل کی شام پاکستان کے کپتان بابر اعظم نے ایک بار پھر ٹاس جیتنے کے بعد باولنگ کا فیصلہ کیا۔ نیوزی لینڈ نے مقررہ 20 اووروں میں 8 ۔وکٹوں کے نقصان پر 134رنز بنائے۔

نیوزی لینڈ کی جانب سے ڈیرل مچل اور ڈیون کانوے ٹاپ سکورر رہے۔ دنوں نے ستائیس ستائیس رنز کی اننگز کھیلی۔ مچل کی اننگ میں دو چھکے اور ایک چوکا شامل تھا۔ دیگر نمایاں بلے بازوں میں کپتان کین ولیمسن نے چھبیس گیندوں پر پچیس رنز بنائے۔

پاکستان کی جانب سے حارث روف کامیاب ترین باولر رہے۔ انہوں نے چار اووروں میں 22 رنز دے کر چار کھلاڑیوں کو آوٹ کیا۔ حارث روف کی ورلڈ کپ اسکواڈ میں شمولیت پر تنقید ہوتی رہی ہے۔ لیکن بھارت اور نیوزی لینڈ کے خلاف دونوں میچوں میں انہوں نے نپی تلی باولنگ کی ہے۔

بھارت کے خلاف پاکستان کی طرف سے بہترین باولنگ کا مظاہرہ کرنے والے شاہین آفریدی اس میچ میں بھی بھرپور ردھم میں نظر آئے۔ انہوں نے پہلا اوور میڈن کرایا اور مجموعی طور پر چار اووروں میں 21 رنز دے کر ایک وکٹ حاصل کی۔

پاکستان نے ہدف پانچ وکٹوں 19ویں اوور میں حاصل کر لیا۔ 27 پر پانچ وکٹیں گرنے اور وکٹ کے سلو ہونے کے بعد جب رنز بنانا مشکل ہو رہا تھا میچ دچسپ ہو گیا۔ اس موقع پر آصف علی کی تیز رفتار بلے بازی نے میچ کا پانسہ پاکستان کے حق میں پلٹ دیا۔ انہوں نے 12 گیندوں پر تین چھکوں اور ایک چوکے کی مدد سے 27 رنز بنائے۔ تجربہ کار شعیب ملک 27 رنز بنا کر ناٹ آوٹ رہے۔ محمد رضوان 33 رنز بنا کر ٹاپ سکورر رہے۔ کپتان بابر اعظم 9 کے انفرادی سکور پر ساوتھی کی گیند پر بولڈ ہوئے۔

نیوزی لینڈ کی طرف سے سودھی نے چار اووروں میں انتیس رنز دے کر دو کھلاڑیوں کو آوٹ کیا۔ سینٹلر، ساوتھی، اور بولٹ کے حصے میں ایک ایک وکٹ آئی۔

اس میچ میں فتح کے بعد پاکستان کا سیمی فائنل تک رسائی آسان ہو گئی ہے۔

اس سے قبل نیوزی لینڈ کی ٹیم نے پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے مقررہ 20 اوورز میں 134 رنز اسکور کیے ہیں۔

پاکستان نے ٹاس جیت کر نیوزی لینڈ کو پہلے بیٹنگ کی دعوت دی تھی جس کے بعد اب اسے میچ میں کامیابی کے لیے 135 رنز درکار ہیں۔

نیوزی لینڈ نے 134 کے مجموعے تک پہنچنے کے لیے آٹھ وکٹیں گنوائیں۔ آؤٹ ہونے والے کھلاڑیوں میں مارٹن گپٹل نے 17، ڈیرل مچل نے 27، کین ولیمسن نے 25، ڈیوون کونوئے نے 27، گلین فلپس نے 13، ٹم سیفرٹ نے 8، مچل سینٹنر نے 6 اور جیمز نیشم نے ایک رن بنایا۔ سودھی دو رنز بنا کر ناٹ آؤٹ رہے۔

پاکستان نے اس میچ میں اپنی وہی ٹیم برقرار رکھی ہے جس نے بھارت کے خلاف فتح حاصل کی تھی۔

واضح رہے کہ گزشتہ ماہ سیکیورٹی خدشات کو جواز بنا کر پاکستان کا دورہ منسوخ کرنے والی کیویز ٹیم اور گرین شرٹس اس واقعہ کے بعد پہلی مرتبہ ایک دوسرے کے مدمقابل ہیں۔

نیوزی لینڈ کے کھلاڑیوں کو انڈین پریمیئر لیگ (آئی پی ایل) میں کھیلنے کی وجہ سے متحدہ عرب امارات کی وکٹوں اور کنڈیشن کا بخوبی اندازہ ہے، جب کہ پاکستانی ٹیم کے کھلاڑیوں کا ایونٹ میں اپنے افتتاحی میچ میں بھارت کو شکست دے کر مورال بلند ہے۔

پاکستان اور نیوزی لینڈ کی ٹیمیں ٹی ٹوئنٹی میچز میں مجموعی طور پر 24 مرتبہ آمنے سامنے آ چکی ہیں جن میں سے پاکستان نے 14 میچز جیتے جب کہ نیوزی لینڈ 10 میچز میں فتح یاب رہی۔

اسی طرح ٹی 20 ورلڈ کپ کے مقابلوں میں بھی دونوں ٹیمیں پانچ مرتبہ آمنے سامنے آئیں، جن میں پاکستان ٹیم نے تین مرتبہ بازی اپنے نام کی اور دو میچز نیوزی لینڈ کے نام رہے۔

منگل کو کھیلا جانے والا میچ دونوں ٹیموں کے درمیان میگا ایونٹ میں چھٹا ٹی 20 انٹرنیشنل میچ ہے۔

نیوزی لینڈ کی ٹیم:

کین ولیمسن (کپتان)، مارٹن گپٹل، ڈیوون کونوئے، گلین فلپس، ٹم سیفرٹ، ڈیرل مچل، جیمز نیشم، مچل سینٹنر، ٹم ساؤتھی، ٹرینٹ بولٹ، اِش سودھی

پاکستان کی ٹیم:

بابر اعظم (کپتان)، محمد رضوان، فخر زمان، محمد حفیظ، شعیب ملک، آصف علی، شاداب خان، عماد وسیم، حسن علی، حارث رؤف، شاہین آفریدی

Facebook Notice for EU! You need to login to view and post FB Comments!

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں