خیبر پختونخوا سے سالانہ ہزاروں گدھے چین سپلائی کئے جائیں گے، صوبے کو سالانہ اربوں روپے کی آمدن ہوگی

پشاور(ڈیلی اردو/ آن لائن ) خیبر پختونخوا سے سالانہ 80 ہزار سے زائد گدھے چین سپلائی کرنے کے معاہدے سے وفاق کو آگاہ کر دیا گیا ہے چینی دونوں کمپنیاں آئندہ ہفتے اسلام آباد میں اس حوالے سے باقاعدہ طور پر صوبائی حکومت کے ساتھ معاہدہ کرینگے

معاہدے کے موقع پر چینی سفیر اور وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا بھی موجود ہو نگے۔ معاہدے کی دستاویزات کو صوبائی حکومت نے حتمی شکل دیدیا ہے۔ چین کے ساتھ گدھوں کی تجارت سے صوبے کو سالانہ اربوں روپے کی آمدنی ہو گی جبکہ صوبے میں گدھوں کی افزائش نسل کے لئے کرک، نوشہرہ، پشاور، بنوں سمیت دیگر اضلاع میں فارمز بھی بنائے جائینگے۔

گدھوں کے معاہدے کے بعد صوبے میں غیر قانونی کاروبار بھی ختم ہو جائیگا اس وقت خیبر پختونخوا میں مجموعی طور پر گدھوں کی تعداد ہزاروں میں ہیں مختلف گدھوں کی قیمتیں ڈیمانڈ کے مطابق مختلف ہیں

خیبر پختونخوا کے صوبائی دارلحکومت پشاور میں گدھا 10ہزار روپے سے لیکر 1لاکھ روپے تک فروخت ہو رہا ہے اندرون شہر گدھوں سے ملبہ کی سپلائی بھی کی جاتی ہیں صوبے میں گدھے سب سے زیادہ پشاور سمیت جنوبی اضلاع اور مالاکنڈ ڈویژن کے بعض اضلاع میں بھی پائے جاتے ہیں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں