130

سپریم جوڈیشل کونسل نے جسٹس قاضی فائز عیسی سے  2جولائی کو جواب طلب کر لیا

اسلام آباد (ڈیلی اردو) سپریم جوڈیشل کونسل نے جسٹس قاضی فائز عیسی سے 2 جولائی کو جواب طلب کر لیا۔سپریم جوڈیشل کونسل کی جانب سے جاری بیان کے مطابق اعلی عدالتوں کے دو ججز جسٹس قاضی فائز عیسی  اور جسٹس کے کے آغا کے خلاف ریفرنس کی سماعت 2 جولائی کو ہو گی۔

سپریم جوڈیشل کونسل نے براہ راست اظہار وجوہ کا نوٹس بھیجنے کے بجائے ایس جے سی پروسیسنگ آف انکوائری 2005 کے پیرا گراف نمبر 8 (3) کے تحت ریفرنس کی ایک نقل جج صاحب کو بھیجی ہے۔

اس سے قبل ریفرنس کی ایک نقل اور دیگر دستاویزات 14 جون کو سپریم کورٹ کے جج جسٹس فائز عیسی  کی اسلام آباد رہائش گاہ پر پہنچائے گئے تھے۔

یاد رہے کہ وفاقی حکومت نے سپریم کورٹ کے جسٹس قاضی فائز عیسی اور سندھ ہائی کورٹ کے جسٹس کے کے آغا کے خلاف سپریم جوڈیشل کونسل میں ریفرنس دائر کر رکھے ہیں۔

سپریم جوڈیشل کونسل میں جسٹس قاضی فائز عیسی کے خلاف ریفرنس کی سماعت 14 جون کو ہوئی جب کہ اس موقع پر ان سے اظہار یکجہتی کے لیے ملک کے بیشتر حصوں میں وکلا اور بار کونسلز کی جانب سے احتجاج کیا گیا اور دھرنے دیئے گئے.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں