179

‏نیب کے ڈپٹی پراسیکیوٹر ظفر عباسی کے گھر کے باہر فائرنگ کا مقدمہ درج

اسلام آباد (ڈیلی اردو) اسلام آباد میں نیب ڈپٹی پراسیکیوٹر سردار مظفر عباسی کے گھر کے باہر فائرنگ کا مقدمہ پولیس اسٹیشن انڈسٹریل ایریا میں درج کرلیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق گزشتہ رات اسلام آباد میں تھانہ انڈسٹریل ایریا کی حدود سیکٹر آئی ایٹ تھری میں قومی احتساب بیورو (نیب) کے ڈپٹی پراسیکیوٹر جنرل مظفر عباسی پر فائرنگ کا واقعہ پیش آیا ہے۔ پولیس نے مظفر احمد خان عباسی کی درخواست پر نامعلوم افراد کے خلاف پولیس اسٹیشن انڈسٹریل ایریا میں مقدمہ درج کرلیا ہے۔

ذرائع کے مطابق نیب کے ڈپٹی پراسیکیوٹر جنرل مظفر عباسی نے بتایا کہ وہ گلی میں واک کررہے تھے کہ اچانک انہیں گولی چلنے کی آواز آئی۔

انہوں نے کہا کہ میں نے فائر کرنے والے کسی شخص کو نہیں دیکھا، تھانہ انڈسٹریل پولیس کو اطلاع کی جو موقع پر پہنچ کر تفتیش کر رہی ہے۔

نیب کی جانب سے جاری پریس ریلیز میں واقعے کو مظفر عباسی پر قاتلانہ حملہ قرار دیا گیا، چیئرمین قومی احتساب بیورو جسٹس (ر) جاوید اقبال نے واقعے کا نوٹس لیتے ہوئے راولپنڈی بیورو کے ڈائریکٹر کو ہدایت کی کہ آئی جی اسلام آباد کو فائرنگ کے واقعے سے آگاہ کیا جائے۔

انہوں نے ڈائریکٹر جنرل نیب راولپنڈی کو ہدایت کی ہے کہ واقعے کی اطلاع فوری طور پر انسپکٹر جنرل (آئی جی) اسلام آباد کو دی جائے۔

چیئرمین نیب نے مطالبہ کیا ہے کہ واقعے میں ملوث افراد کو گرفتار کر کے قانون کے مطابق کارروائی کی جائے اور سردار مظفر عباسی کی سیکورٹی سخت کی جائے۔

انہوں نے کہا کہ ایسے بزدلانہ حملے نیب افسران و اہلکاروں کے حوصلے کمزور نہیں کر سکتے، ہم نے نہ پہلے کسی کی دھمکی کی پرواہ کی اور نہ اب کریں گے۔

چیئرمین نیب نے کہا کہ نیب افسران محنت اور ایمانداری سے بدعنوانی کے خاتمے کیلئے قومی فرض سرانجام دیتے رہیں گے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں