128

جعلی اکاؤنٹس کیس: سابق صدر آصف زرداری کی بہن فریال تالپور رات گئے اڈیالہ جیل منتقل

راولپنڈی (مانیٹرنگ ڈیسک) سابق صدر آصف علی زرداری کی ہمشیرہ اور پیپلز پارٹی کی رہنما فریال تالپور کو رات گئے پولی کلینک ہسپتال سے اڈیالہ جیل منتقل کردیا گیا۔

فریال تالپور جعلی اکاونٹس کیس میں زیر حراست ہیں اور طبیعت ناساز ہونے کے باعث اسلام آباد کے پولی کلینک اسپتال میں زیرعلاج تھیں۔

نیب نے انہیں طبیعت بہتر ہونے پر رات گئے ہسپتال سے اڈیالہ جیل راولپنڈی منتقل کیا۔

اس پر فریال تالپور کا کہنا تھا کہ نیب کو شرم آنی چاہیے کہ رات 12 بجے ایک عورت کو اس طرح جیل منتقل کیا گیا۔

انہوں نے کہا کہ نیب نے غیر قانونی حرکت کی ہے کیا یہ نیا پاکستان ہے؟ کیا یہ انصاف ہے کہ ایک بیمار قیدی کو رات کے 12 بجے یوں غیرقانونی طور پر جیل منتقل کردیا جائے۔

ادھر نیب ترجمان نے مؤقف اختیار کیا کہ فریال تالپور کو جیل حکام نے پولی کلینک اسپتال سے ڈسچارج کیے جانے کے بعد جیل منتقل کیا کیونکہ انہیں احتساب عدالت نے جوڈیشل تحویل میں دیا ہے۔

واضح رہے کہ رواں برس جون میں فریال تالپور اور ان کے بھائی آصف علی زرداری کو جعلی اکاؤنٹس کیس میں احتساب عدالت نے گرفتار کیا تھا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں