کینیڈا: مسجد میں فائرنگ کرکے 6 نمازیوں کو شہید کرنیوالے دہشت گرد کو عمر قید کی سزا

کیوبک (ویب ڈیسک) کینیڈا کے شہر کیوبک کی مسجد میں فائرنگ کرکے 6 نمازیوں کو شہید کرنے والے دہشت گرد کو عمر قید کی سزا سنادی گئی۔

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق کینیڈا کی عدالت نے 29 سالہ الیگزینڈر ہسونیٹ کو 6 افراد کے قتل اور اقدام قتل کے دیگر مقدمات میں عمر قید کی سزا سنا دی، ملزم 40 سال بعد پیرول پر رہائی کے لیے عدالت سے رجوع کر سکتا ہے۔

پراسیکیوٹر کی جانب سے ملزم کو 150 سال قید کی سزا کی استدعا کی گئی تھی جسے جج نے مسترد کر دیا۔

ملزم کے خلاف 246 پیجز پر مشتمل فیصلہ 6 گھںٹے میں پڑھ کر سنایا گیا، فیصلہ سننے کے بعد عدالت میں موجود 29 سالہ ملزم کے اہل خانہ اور دوست جذبات پر قابو نہ رکھ سکے اور رونے لگے۔

واضح رہے کہ دہشت گرد نے 2017 میں کینیڈا کے شہر کے کیوبک کی ایک مسجد میں مسلح حملہ آور نے فائرنگ کرکے 6 نمازیوں کو شہید اور 6 کو زخمی کر دیا تھا، کینیڈین وزیراعظم جسٹن ٹروڈو نے واردات کو دہشت گردی قرار دیا تھا۔

کینیڈین وزیراعظم جسٹن ٹروڈو نے اپنے پیغام میں کہا تھا کہ فائرنگ کے اس واقعے کی تحقیقات جاری ہیں، مسلمان کمیونٹی ہماری سوسائٹی کا اہم حصہ ہے، اس طرح کے حملوں کی ہمارے معاشرے میں کوئی جگہ نہیں ہے۔

عینی شاہد کا کہنا تھا کہ 3 حملہ آوروں نے مسجد میں داخل ہونے کے ساتھ ہی نمازیوں پر فائرنگ کر دی، ععینی شاہدین کا کہنا ہے کہ حملے کے وقت مسجد میں 40 افراد موجود تھے۔

Facebook Notice for EU! You need to login to view and post FB Comments!

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں