181

امریکا نے شام میں ایک نیا فوجی اڈہ اور رن وے تیار کرنا شروع کردیا

دمشق (ڈیلی اردو) امریکی فوج نے شام میں ایک نیا فوجی اڈہ اور رن وے تیار کرنا شروع کردیا۔

شام میں انسانی حقوق کے لیے کام کرنے والے ادارے سیریئن آبزرویٹری فار ہیومن رائٹس نے کہا ہے کہ امریکی افواج نے حسکہ کے مشرق میں الیعربیہ کے علاقے (تل کوجر) میں ایک فوجی اڈہ قائم کرنے کے ساتھ ساتھ ہوائی جہازوں کے لیے ایک رن وے بھی تیار کرنا شروع کیا ہے۔

سیرین آبزر ویٹری کے مطابق عراق کی سرحد کے قریب واقع حسکہ میں امریکی فوج نے ہیلی کاپٹروں اور کارگو طیاروں کے لیے لینڈنگ پیڈ قائم کرلیا ہے۔ نئے امریکی ایئربیس کے اطراف میں کنکریٹ بلاکس کی دیوار کھڑی کی گئی ہے۔

آبزرویٹری نے گذشتہ روز عراق کے کردستان علاقے سے آنے والے الولید کراسنگ کے راستے ایک امریکی قافلے کے شمال مشرقی شام میں داخلے کا دعویٰ کیا تھا۔

شامی انسانی حقوق گروپ کے مطابق امریکی فوج کا یہ قافلہ حسکہ کے قریب الشدادی شہر کی طرف روانہ ہوگیا تھا۔

اس کانوائے میں 19 گاڑیاں شامل تھیں جن میں 13 ٹرک اور پانچ بکتر بند گاڑیاں تھیں۔ اس سال اپریل میں امریکی افواج نے دیر ایزور اور حسکہ صوبوں میں اپنے اڈے مزید بڑھا دیے تھے تاکہ اس علاقے میں روس کا اثرو رسوخ کم کیا جا سکے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں