140

افغانستان: طالبان کا قندھار میں پولیس ہیڈ کوارٹر پر خودکش حملہ، ضلعی سربراہ سمیت 6 اہلکار ہلاک

کابل (ڈیلی اردق)  افغانستان کے صوبوں قندھار اور غزنی میں طالبان کے حملوں میں ضلعی پولیس کے سربراہ سمیت چھ پولیس افسر ہلاک ہوگئے۔

قندھار میں طالبان دہشت گردوں کے ایک خودکش حملے میں تین پولیس اہلکار ہلاک ہوگئے جبکہ مشرقی صوبے غزنی میں سڑک پر ایک بم دھماکے میں ایک ضلعی پولیس سربراہ سمیت تین پولیس افسر ہلاک ہوگئے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق قندھار کے گورنر قندھار کے ترجمان باہر احمد احمدی نے بتایا کہ بدھ کو علی لاصباح 4 بجے طالبان حملہ آور نے دھماکا خیز مواد سے بھرا ایک فوجی ٹرک گورنر ہاؤس اور افغان پولیس کے ہیڈکوارٹر تک لے جانے کی کوشش کی اور سیکیورٹی اہل کاروں کی جانب سے فائرنگ کرکے روکنے کی کوشش کے بعد خود کو دھماکے سے اُڑا لیا۔

قندھار کے ضلع شاولی میں پیش آنے والے اس واقعے میں تین افغان سیکیورٹی اہل کار ہلاک اور 14 شہریوں کے زخمی ہونے کی تصدیق ہوچکی ہے جب کہ پولیس ہیڈ کوارٹر اور گورنر کی رہائشی عمارت کو بھی شدید نقصان پہنچا ہے۔

دوسری جانب افغانستان کے صوبے غزنی میں چوکیوں کا جائزہ لینے کے لیے نکلنے والے ضلعی پولیس کے سربراہ حبیب اللہ ایک حملے میں اپنے دو محافظوں سمیت ہلاک ہوگئے۔ طالبان باضابطہ طور پر ان دونوں کارروائیوں کی ذمے داری قبول کرچکے ہیں۔

منگل کے روز ننگرہار میں ہونے والے ایک کار بم حملے میں مقامی پولیس کمانڈر اور دیگر تین افراد کی جانیں گئیں تاہم تاحال کسی نے اس واقعے کی ذمے داری قبول نہیں کی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں