176

مقبوضہ کشمیر میں خودکش حملے کا الزام پاکستان پر نہ لگائیں: فاروق عبد اللہ

سری نگر (نیوز ڈیسک) بھارتی ٹی وی چینل کی پاکستان دشمنی پھر سامنے آگئی، خاتون صحافی نے مقبوضہ کشمیر کے سابق وزیر اعلیٰ فاروق عبداللہ سے پاکستان مخالف بیان دلوانے کی کوشش کی تو انہوں نے کھری کھری سنادی۔

تفصیلات کے مطابق بھارتی ٹی وی چینل کی خاتون صحافی سابق وزیر اعلیٰ مقبوضہ کشمیر فاروق عبداللہ سے پاکستان مخالف بیان دلوانے کی کوشش کی تو وہ سناتے ہوئے انٹرویو چھوڑ کر چلے گئے۔

فاروق عبداللہ نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوجیوں پر ہونے والے حملے کا الزام پاکستان پر نہ ڈالیں، یہ مقامی نوجوان ہیں جو بھارت سے لڑ رہے ہیں یہ جنگ ختم نہیں ہوگی۔

سابق وزیراعلیٰ مقبوضہ کشمیر نے کہا کہ کشمیر میں بندوق سے مسئلہ حل نہیں ہوگا، یہ حالات جنگ سے نہیں مذاکرات سے ہی حل ہوسکتے ہیں۔

فاروق عبداللہ سے بھارتی خاتون صحافی بار بار پاکستان مخالف سوال کرتی رہیں تو انہوں نے خاتون کو شٹ اپ کال دی اور انٹرویو ادھورا چھوڑ کر روانہ ہوگئے۔

واضح رہے کہ بھارت نے سفارتی آداب کی دھجیاں اُڑاتے ہوئے بغیر کسی ثبوت کے پلوامہ حملے پر پاکستانی ہائی کمشنر کو طلب کرکے احتجاج کیا جبکہ پاکستان میں متعین اپنے ہائی کمشنر کو بھی واپس بلا لیا ہے۔

یاد رہے کہ گزشتہ روز کشمیر کے ضلع پلوامہ کے علاقے آونتی پورہ میں خودکش حملہ کیا گیا جس میں بارود سے بھری گاڑی بھارتی فوجیوں کی بس سے ٹکرا گئی اس کے نتیجے میں 50 بھارتی فوجی ہلاک ہو گئے تھے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں