683

پنجگور میں دہشت گردوں کا ایف سی کانوائے پر حملہ، شہدا کی تعداد 6 ہو گئی

تربت (ڈیلی اردو) بلوچستان کے صوبے پنجگور میں دہشت گردی کے حملے میں 6 ایف سی اہلکار شہید ہو گئے ہیں جبکہ متعدد اہلکار زخمی ہونے کی اطلاعات ملی ہیں۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ ضلع پنجگور میں دہشت گردوں نے سی پیک روٹ پہ ایف سی کانوائے پر حملہ کیا۔ حملے کے نتیجے میں 4 اہلکار موقع پر شہید ہو گئے جبکہ 2 اہلکار ہسپتال میں زخمیوں کی تاب نہ لاتے ہوئے شہید ہو گئے۔

ذرائع کے مطابق سیکیورٹی فورسز پر حملہ پنجگور اور بالگتر کے درمیانی علاقے گوران کے مقام پر ہوا۔ جبکہ سیکیورٹی ذرائع نے 4 اہلکاروں کی شہادت کی تصدیق بھی کی ہے۔

زخمیوں کو سی ایم ایچ اسپتال منتقل کیا گیا۔ جبکہ سیکیورٹی فورسز کی جانب سے علاقے کو گھیرے میں لے کر سرچ آپریشن شروع کر دیا گیا ہے۔

اس موقع پر وزیر اعلیٰ بلوچستان کی جانب سے واقعے کی مذمت کی گئی۔ وزیر اعلیٰ کا کہنا تھا کہ واقعہ پر امن بلوچستان اور صوبےکی ترقی کےخلاف سازش ہے۔

امن کے لیے سیکیورٹی اہلکاروں کی قربانیاں ناقابل فراموش ہیں۔ واقعےمیں ملوث عناصر کو ہر صورت کیفر کردار تک پہنچایا جائے گا۔

اس حملے کی ذمہ داری ‏بلوچ مسلح تنظیم راجی آجوئی سنگر (براس) کے ترجمان خان بلوچ نے قبول کرلی ہے

خان بلوچ نے دعوی کیا ہے کہ حملہ میں 9 اہلکار ہلاک کیے گئے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں