178

پلواما حملہ: ‏پاکستان اور بھارت کے درمیان تجارت بند، 350 ٹرک واہگہ بارڈر پر رک گئے

لاہور (نیوز ڈیسک) پاکستان اور بھارت کے درمیان تجارت کا سلسلہ بند ہوگیا اور بھارتی تاجروں نے تمام آرڈرز منسوخ کردیے۔

ذرائع وزارت تجارت کے مطابق گزشتہ دو روز سے پاکستان سے کوئی بھی مال بھارت نہیں جاسکا جب کہ بھارتی حکومت نے پاکستانی اشیاء پر 200 فیصد ریگولیٹری ڈیوٹی عائد کردی ہے۔

ذرائع وزارت تجارت کا کہنا ہے کہ بھارتی تاجروں نے 16 فروری کو جانے والا کروڑوں روپے کا مال واپس پاکستان بھیجنےکا فیصلہ کرلیا جب کہ بھارتی تاجروں نے ایڈوانس میں دیے گئے کروڑوں روپے بھی واپس مانگ لیے ہیں۔

ذرائع وزارت تجارت کے مطابق سیمنٹ کے 350 بڑے ٹرک واہگہ بارڈر پر رک گئے جبکہ سوڈا ایش،چمڑا، سالٹ اور کیمیکلز کے سیکڑوں ٹرک بھی واہگہ بارڈر پر موجود ہیں۔

یاد رہے کہ مقبوضہ کشمیر کے ضلع پلوامہ میں 14 فروری کو قابض بھارتی فورسز کے قافلے پر حملے کے نتیجے میں 50 اہلکاروں کی ہلاکت کے بعد بھارت کی جانب سے پاکستان پر الزام تراشی کی جارہی ہے۔

بھارت نے یکطرفہ طور پر پاکستان کا موسٹ فیور نیشن (ایم ایف این) کا اسٹیٹس ختم کرتے ہوئے پاکستانی مصنوعات پر 200 فیصد کسٹم ڈیوٹی عائد کردی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں