252

اسرائیل کو تسلیم کر لینا چاہئے: سابق وزیراعلی نواب اسلم خان رئیسانی

کوئٹہ (ڈیلی اردو) بلوچستان کے سابق وزیراعلی نواب اسلم خان رئیسانی کا کہنا ہے کہ اسرائیل کر اگر تسلیم کر لیا جائے تو اس میں کوئی حرج نہیں ہے۔

رکن اسمبلی نے نواب اسلم خان رئیسانی کا کہنا تھا کہ سارا جھگڑا پانی کا ہے۔ پاکستان اور بھارت کے مابین اصل تنازعہ کشمیر نہیں بلکہ پانی کا تنازعہ ہے۔ دونوں ممالک کو بندوق اور بارود کے بجائے مذاکرات اور بات چیت کے ذریعے تنازعہ حل کرنا چاہئیے۔

انہوں نے کہا کہ کشیدگی کے باعث دونوں ممالک اربوں ڈالر دفاعی بجٹ پر خرچ کر رہے ہیں، تنازع ختم کر کے یہ رقم دونوں ممالک کو اپنے عوام کی فلاح و بہبود پر خرچ کرنا چاہئیے۔

واضح رہے کہ اس سے قبل سابق صدر پرویز مشرف نے بھی اسرائیل سے تعلقات بنانے کے حوالے سے بیان دیا تھا۔ سابق صدر جنرل (ر) پرویز مشرف نے دبئی میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا تھا کہ بھارت کا مقابلہ کرنے کے لئے اسرائیل سے تعلقات بنائے جاسکتے ہیں۔جس پر مسلم لیگ ن کے مرکزی رہنما خواجہ آصف نے سابق صدر پرویز مشرف کے اسرائیل کی حمایت میں بیان پر تنقید کرتے ہوئے کہا تھا کہ اقتدار سے علیحدگی مگرظالم نشہ اترتا ہی نہیں، طاقت سے محرومی کو11سال بیت گئے مگر بیانات ،مشرف نے کہا کہ تھوڑی سٰ کوشش سے اسرائیل سے تعلقات بہتر ہوسکتے ہیں۔

انہوں نے سوشل میڈیا ٹویٹر پر اپنے ٹویٹ میں ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ اقتدار سے علیحدگی اور طاقت سے محرومی کو11سال بیت گئے ہیں مگر ظالم نشہ اترتا ہی نہیں ہے۔ اللہ معاف کرے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں