163

میکسیکو کے نائٹ کلب میں فائرنگ سے 15 افراد ہلاک، متعدد زخمی

میکسکیو سٹی (ڈیلی اردو) میکسیکو کی وسطی ریاست گوانا جواتو کے علاقے میں ایک نائٹ کلب میں مسلح افراد کی فائرنگ سے کم ازکم 15 افراد ہلاک اور متعدد زخمی ہوگئے۔

غیر ملکی میڈیا رپورٹس کے مطابق میکسیکو کے شہر سلامانکا کے نائٹ کلب پر یہ حملہ نصف شب کے قریب کیا گیا۔ رپورٹس کے مطابق متعدد گاڑیوں میں گینگسٹرز کا گروپ کلب پہنچا اور اندر داخل ہوکر وہاں موجود افراد پر گولیوں کی بوچھاڑ کردی۔

میڈیا رپورٹس میں کہا گیا ہے کہ اس واقعے میں سانتا روزا ڈی لیما نامی گینگ کے ملوث ہونے کے امکانات ظاہر کیے جارہے ہیں کیوں کہ اس علاقے میں اس کا کافی اثر و رسوخ ہے۔

خبرایجنسی اے ایف پی کی رپورٹ کے مطابق پبلک پراسیکیوٹر آفس کے ترجمان جوان جوز مارٹینز کا کہنا تھا کہ فائرنگ سے ایک خاتون سمیت 4 افراد زخمی بھی ہوئے۔

رپورٹ کے مطابق نائٹ کلب مرکزی ریاست گواناجواتو میں واقع تھا جہاں حکام نے ایندھن چرا کر بیچنے والے جرائم پیشہ افراد کے خلاف کارروائی شروع کر رکھی ہے۔

ترجمان جوان جوز مارٹینز نے کہا کہ حملہ ہفتے کی علی الصبح ہوا جہاں کئی مسلح افراد نے وسطی شہر سلامانکا میں قائم لا پلایا نائٹ کلب میں فائرنگ کی اپنی گاڑیوں میں فرار ہوگئے۔

ان کا کہنا تھا کہ چاروں زخمیوں کو فوری طبی امداد کے لیے قریبی ہسپتال منتقل کردیا گیا جبکہ حملے میں نشانہ بننے والے افراد کی شناخت تاحال نہ ہوسکی۔

خیال رہے کہ میکسیکو کا شہر سلامانکا میں سرکاری آئل کمپنی پیٹرولیوس میکسیکانوس (پیمیکس) کی مرکزی پائپ لائن ہے جہاں تیل چوروں نے گزشتہ چند برسوں میں کمپنی کو 3 ارب ڈٓالر کا نقصان پہنچایا ہے۔

اس سے قبل رواں سال جنوری میں ریفائنری کے قریب کے کار پارکنگ کے احاطے میں ایک جعلی بم رکھ دیا گیا تھا۔

تیل چوروں کے گینگ کی جانب سے میکسیکو کے صدر ایندریس مینوئیل لوپیز اوبراڈور کو دھمکی دی تھی اور مطالبہ کیا تھا کہ کارروائی کرنے والے فوجیوں کو علاقوں سے بے دخل کیا جائے۔

سلامانیکا، سانتا روزا ڈی لیما سے 60 میل سے بھی کم فاصلے پر واقع ہے جہاں حکام نے چند روز قبل گینگ کے مبینہ سربراہ جوان انتونیو یاپیز کے خلاف آپریشن کیا تھا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں