201

اٹک میں درندہ صفت قاری نے 7 سالہ بچے کو بدفعلی کے بعد قتل کردیا

اٹک (نیوز ڈیسک) صوبہ پنجاب کے شہر اٹک میں درندہ صفت قاری نے 7 سالہ بچے کو بدفعلی کے بعد گلا گھونٹ کر قتل کردیا۔

تفصیلات کے مطابق اٹک کی تحصیل فتح جنگ میں درندہ صفت قاری عبدالحئی نے سات سالہ بچے کو بدفعلی کے بعد گلا گھونٹ کر قتل کردیا، پولیس نے ملزم گرفتار کرلیا۔

پولیس کے مطابق گرفتار ملزم قاری عبدالحئی نے اقبال جرم کرلیا، فتح جنگ کا ننھا حذیفہ والد کے پیچھے نماز مغرب کی ادائیگی کے لیے گھر سے نکلا تھا جس کو مدرسے کے قاری نے زیادتی کے بعد گلا دبا کر قتل کردیا۔

پولیس کا کہنا ہے کہ ملزم قاری عبدالحئی نے جرم چھپانے کے لیے سات سالہ حذیفہ کی لاش کنوئیں میں پھینک دی تھی۔

ڈی پی او اٹک کا کہنا ہے کہ ایسے درندوں کو معاف نہیں کیا جائے گا، ملزم کو اس کی درندگی کی سخت سزا دی جائے گی۔

واضح رہے کہ گزشتہ سال اٹک کے علاقے فورملی میں مدرسے کے استاد نے اپنے 10 سالہ شاگرد کو جنسی زیادتی کا نشانہ بنایا تھا، پولیس نے مقدمہ درج کرکے قاری کو گرفتار کرلیا تھا۔

بچے کی حالت دیکھ کر جب والدہ اس کو ہسپتال لے کر گئیں تو ڈاکٹر نے ٹیسٹ کرنے کے بعد بچے کے ساتھ زیادتی کی تصدیق کی تھی۔

پولیس نے میڈیکل رپورٹ کی بنیاد پر قاری تنویر کو گرفتار کرکے بچے کی والدہ کی مدعیت میں مقدمہ درج کیا تھا جس میں زیادتی، غیرفطری، جنسی تعلق اور اغوا برائے بدفعلی کی دفعات شامل کی گئی تھیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں