208

بلوچستان میں سیلابی ریلے میں پھنسے ہندو یاتریوں کو ریسکیو کرلیا گیا

کوئٹہ (ویب ڈیسک) بلوچستان کے ضلع کچھی میں سیلابی ریلے کے سبب پھنس جانے والے 150 سے زائد ہندو یاتریوں کو بحفاظت نکال لیا گیا۔

ترجمان صوبائی ڈیزاسٹرمینجمنٹ اتھارٹی کے مطابق بلوچستان کے ضلع کچھی میں سیلابی ریلے کے سبب پھنس جانے والے 150 سے زائد ہندو یاتریوں کو بحفاظت نکال کر گند واہ پہنچا دیا گیا۔

ایف سی بلوچستان اور کچھی انتظامیہ نے ریسکیو آپریشن کیا اور ہیلی کاپٹر کی مدد سے متاثرین کو نکالا۔ رکن بلوچستان اسمبلی دنیش پلیانی کے مطابق تمام زائرین خیریت سے ہیں اور جلد سنی شوران پہنچ جائیں گے۔

ایف سی بلوچستان کی طرف سے متاثرہ افراد کو اشیائے خوردونوش اور دیگر ضروری سامان بھی پہنچایا گیا تھا۔

اسسٹنٹ کمشنرڈھاڈر منیر احمد کے مطابق صوبائی حکومت نے تین ہیلی کاپٹر فراہم کیے تھے، ہم نے ایف سی اور لیویز کے کی مدد تمام افراد کو نکال لیا۔

وزیراعلی بلوچستان جام کمال خان نے ضلع کچھی میں پھنسے ہند یاتریوں کے باحفاظت ریسکیو پر اطمینان کا اظہار کیا ہے۔ انہوں نے یاتریوں کو ریسکیو کر کے محفوظ مقام پر پہنچانے پر پاک فوج، ضلعی انتظامیہ، ایف سی اور لیویز فورس کو خراج تحسین پیش کیا۔جام کمال نے کہا کہ مشترکہ کاوشوں اور بروقت اقدامات سے قیمتی انسانی جانوں کو بچانا ممکن ہو سکا۔

ہندو برادری کے150 زائد افراد بولان کے پہاڑی علاقے میں مذہبی تہوار منانے گئے تھے اور سیلابی ریلے کے سبب پہاڑی علاقے میں پھنس گئے۔ واقعہ کی اطلاع ملتے ہی ضلعی حکومت نے پاک فوج اور دیگر اداروں کے ساتھ مل کر ریسکیوآپریشن کا شروع کیا۔

حکام نے ہندویاتریوں کو سب سے پہلے اشیا خوردونوش اور زندہ رہنے کیلئے دیگر ضروری سامان پہنچایا جس کے بعد ہیلی کاپٹروں کی مدد سے انہیں وہاں سے محفوظ مقام پر منتقل کیا گیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں